فہرست احادیث

عبداللہ بن عمرو بن العاص رضی اللہ عنہما کہتے ہیں کہ ایک شخص رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کی خدمت میں آیا اور عرض کیا: اے اللہ کے رسول! وضو کس طرح کیا جائے؟ آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے ایک برتن میں پانی منگوایا اور اپنے دونوں ہتھیلیوں کو تین مرتبہ دھویا۔ پھر چہرہ تین مرتبہ دھویا۔ پھر دونوں ہاتھ (کہنیوں سمیت) تین مرتبہ دھوئے۔ پھر سر کا مسح کیا اور شہادت کی دونوں انگلیوں کو اپنے دونوں کانوں میں داخل کیا اور اپنے دونوں انگوٹھوں سے اپنے دونوں کانوں کے ظاہری حصے پر مسح کیا اور شہادت کی دونوں انگلیوں سے اپنے دونوں کانوں کے اندرونی حصے کا مسح کیا۔ پھر اپنے دونوں پاؤں تین تین مرتبہ دھوئے۔ پھر فرمایا: ”وضو (کا طریقہ) اسی طرح ہے؛ لہٰذا جس شخص نے اس سے کچھ زائد کیا یا کمی کی، اس نے برا کیا، اور ظلم کیا“، یا فرمایا: ”ظلم کیا اور برا کیا“۔ سنن ابو داود