عن أبي سعيد الخدري -رضي الله عنه- مرفوعاً: "لتتبعن سنن من كان قبلكم، حذو القذة بالقذة، حتى لو دخلوا جحر ضب لدخلتموه. قالوا: يا رسول الله، اليهود والنصارى؟ قال: فمن؟ "
[صحيح] - [متفق عليه. ملحوظة: الحديث مروي بالمعنى، ولفظة: (حذو القذة بالقذة) وردت في حديث آخر حسن.]
المزيــد ...

ابو سعید خدری رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ رسول اللہ ﷺ نے فرمایا: تم اپنے سے پہلے لوگوں کے طریقوں کے مطابق ایسے چلو گے جیسے تیار کیا ہوا تیر دوسرے تیر کے مطابق ہوتا ہے حتى كہ اگر وہ گوہ کی بِل ميں داخل ہوئے ہوں گے تو تم بھی اس ميں داخل ہونے كى كوشش كروگے. صحابہ كرام نے عرض كيا: یا رسول اللہ! ان سے مراد يہود و نصارىٰ ہيں؟ تو آپ ﷺ نے فرمایا کہ پھر اور کون؟

شرح

ابو سعید رضی اللہ عنہ بتا رہے ہیں کہ رسول اللہ ﷺ نے فرمایا کہ یہ امت سابقہ امتوں کی ان کی عادات، ان کے طور طریقوں اور ان کے دینی امور میں تقلید کرے گی اور ہر شے میں ان کی مشابہت اختیار کرنے کی کوشش کرے گی جیسا کہ تیر کا ایک پر دوسرے پر سے مشابہ ہوتا ہے۔ پھر آپ ﷺ نے اس مشابہت اور اتباع کی تاکید میں فرمایا کہ اگر سابقہ امتیں گوہ کی بل میں باوجود اس کی تنگی اور اندھیرے کے داخل ہوئی ہوں گی تو یہ امت بھی اس میں گھسنے کی کوشش کرے گی۔ جب صحابہ کرام رضی اللہ عنہم نے دریافت کیا کہ کیا پچھلی امتوں سے یہودی اور نصرانی مراد ہیں؟ تو آپ ﷺ نے فرمایا: ہاں۔

ترجمہ: انگریزی زبان فرانسیسی زبان ہسپانوی زبان ترکی زبان انڈونیشیائی زبان بوسنیائی زبان روسی زبان بنگالی زبان چینی زبان فارسی زبان
ترجمہ دیکھیں