عن عائشة رضي الله عنها، قالت: كان رسول الله - صلى الله عليه وسلم - يَسْتَحِبُّ الجَوَامِعَ من الدعاء، ويَدَعُ ما سوى ذلك.
[صحيح.] - [رواه أبو داود وأحمد.]
المزيــد ...

عائشہ رضی اللہ عنہا سے روایت ہے وہ فرماتی ہیں کہ رسول اللہ ﷺ جامع دعاؤں کو پسند فرماتے تھے اور اس کے علاوہ کی دعاؤں کو چھوڑ دیتے تھے۔
صحیح - اسے امام ابو داؤد نے روایت کیا ہے۔

شرح

نبی ﷺ جب دعا مانگتے تھے تو جامع ترین دعا کا انتخاب کرتے۔ آپ ﷺ جامع و عام الفاظ کا انتخاب کرتے اور اسی طرح ایسی دعا کا انتخاب فرماتے جس کے الفاظ کم اور معانی زیادہ ہوں۔ تاہم تمام احوال میں ایسا نہیں ہوتا تھا۔ اور راوی نے اسی چیز کی خبر دی ہے جو اس کے علم میں تھی۔ اور ایسی دعائیں بھی وارد ہیں جن میں بہت تفصیل اور طوالت ہے۔ اور دونوں ہی صورتیں مشروع ہیں۔

ترجمہ: انگریزی زبان فرانسیسی زبان اسپینی ترکی زبان انڈونیشیائی زبان بوسنیائی زبان بنگالی زبان چینی زبان فارسی زبان تجالوج ہندوستانی ویتنامی ایغور کردی ہاؤسا پرتگالی
ترجمہ دیکھیں