عن عمران بن حصين -رضي الله عنهما- قال: كانت بي بَوَاسيرُ، فسألت النبي -صلى الله عليه وسلم- عن الصلاة، فقال: «صَلِّ قائما، فإن لم تستطع فقاعدا، فإن لم تستطع فعلى جَنْبٍ».
[صحيح.] - [رواه البخاري.]
المزيــد ...

عمران بن حصین رضی اللہ عنہما فرماتے ہیں کہ مجھے بواسیر کا مرض تھا۔ میں نے رسول اللہ ﷺ سے نماز کے بارے میں پوچھا کہ کیسے پڑھوں؟ تو آپﷺ نے فرمایا: کھڑے ہو کر پڑھو اگر کھڑے ہونے کی طاقت نہیں تو بیٹھ کر پڑھ لو اور اگر بیٹھ کر بھی پڑھنے کی طاقت نہیں تو پہلو کے بل لیٹ کر پڑھ لو۔
صحیح - اسے امام بخاری نے روایت کیا ہے۔

شرح

اس حدیث میں اس شخص کی نماز کی کیفیت بیان کی جا رہی ہے جس کو بواسیر کا مرض ہو یا کوئی اور تکلیف یا عذر لاحق ہو جس وجہ سے وہ کھڑا نہ ہو سکتا ہو۔ رسول اللہ ﷺ نے یہ بتایا ہے کہ اصل قیام ہے اور اگر کسی میں کھڑے ہونے کی طاقت نہیں تو وہ بیٹھ کر نماز پڑھ لے اور اگر کسی میں بیٹھ کر بھی نماز پڑھنے کی استطاعت نہیں تو وہ پہلو کے بل لیٹ کر پڑھ سکتا ہے۔

ترجمہ: انگریزی زبان فرانسیسی زبان اسپینی ترکی زبان انڈونیشیائی زبان بوسنیائی زبان روسی زبان بنگالی زبان چینی زبان فارسی زبان تجالوج ہندوستانی کردی ہاؤسا پرتگالی مليالم تلگو سواحلی
ترجمہ دیکھیں