عن جابر بن عبد الله -رضي الله عنهما-: أنه سمع رسول الله -صلى الله عليه وسلم- قبل موته بثلاثة أيام، يقول: «لا يَمُوتَنَّ أحدُكم إلا وهو يُحسنُ الظَّنَّ بالله -عز وجل-».
[صحيح.] - [رواه مسلم.]
المزيــد ...

جابر بن عبداللہ رضی اللہ عنہما سے روایت ہے کہ انہوں نے رسول اللہ ﷺ کو آپ کی وفات سے تین دن قبل یہ فرماتے ہوئے سنا: ”تم میں سے کسی شخص كو موت نہ آئے مگر اس حال میں کہ وہ اللہ عز وجل كے ساتھ اچھا گمان رکھتا ہو“۔
صحیح - اسے امام مسلم نے روایت کیا ہے۔

شرح

مسلمان كو چاہیے کہ وہ خوف اور امید کے درمیان زندگی گذارے، اللہ کے غيظ وغضب اور اس کی ناراضگی کا خوف، اور اس كى مغفرت اور رحمت كى اميد ہو۔ البتہ مرتے وقت وه اميد کے پہلو کو غالب رکھے، اس کا اللہ پر حسنِ ظن بڑھ جائے، اور وه اس کی رحمت اور بخشش کی امید رکھے، تاكہ یہ اس گھڑی میں اللہ کی رحمت سے مایوسی كا شكار ہونے سے مانع ہو۔

ترجمہ: انگریزی زبان فرانسیسی زبان اسپینی ترکی زبان انڈونیشیائی زبان بوسنیائی زبان روسی زبان بنگالی زبان چینی زبان فارسی زبان تجالوج ہندوستانی ویتنامی سنہالی کردی ہاؤسا پرتگالی سواحلی
ترجمہ دیکھیں