عن سلمان -رضي الله عنه- عن رسول الله -صلى الله عليه وسلم- قال: «إن ربكم حَييٌّ كريم، يستحيي من عبده إذا رفع يديه إليه، أن يَرُدَّهُمَا صِفْراً».
[صحيح.] - [رواه أبو داود والترمذي وابن ماجه.]
المزيــد ...

سلمان رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ رسول اللہﷺ نے فرمایا: ”بے شک تمھارا رب با حیا، اور سخی ہے، وہ اپنے بندے کے اپنی بارگاہ میں اٹھے ہوئے ہاتھوں کو خالی لوٹاتے ہوئے حیا کرتا ہے“۔
صحیح - اسے ابنِ ماجہ نے روایت کیا ہے۔

شرح

یہ حدیث دعا میں ہاتھ اٹھانے کی مشروعیت کی دلیل ہے اور اس میں اس بات کی وضاحت ہے کہ ہاتھ اٹھانا دعا کی قبولیت کے اسباب میں سے ایک سبب ہے؛ کیونکہ اس ہیئت میں اس غنی اور کریم ذات کے سامنے بندے کی ضرورت مندی اور مسکنت کا اظہار ہوتاہے اور اس میں نیک شگونی کا اظہار بھی ہے کہ اللہ تعالی ان ہاتھوں میں اس کی مانگی گئی شے ڈال دے گا؛ کیوں کہ اللہ تعالی اپنے جود و کرم کی بدولت اس بات سے حیا کرتا ہے کہ جب بندہ سائل بن کر اس کے سامنے ہاتھ اٹھائے، تووہ اسے دیے بغیر خالی ہاتھ ہی لوٹا دے۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ وہ بہت سخی اور کریم ہے۔

ترجمہ: انگریزی زبان فرانسیسی زبان اسپینی ترکی زبان انڈونیشیائی زبان بوسنیائی زبان روسی زبان بنگالی زبان چینی زبان فارسی زبان تجالوج ہندوستانی ویتنامی سنہالی کردی ہاؤسا پرتگالی
ترجمہ دیکھیں