عن أبي ثعلبة الخشني -رضي الله عنه-، عن النبي -صلى الله عليه وسلم- قال: «إن الله تعالى فرضَ فرائِضَ فلا تُضَيِّعُوها، وحدَّ حُدودًا فلا تَعْتَدُوهَا، وحرم أشياء فلا تَنْتَهِكُوها، وسكتَ عن أشياءَ رحمةً لكم غيرَ نسيانٍ فلا تَبْحَثُوا عنها».
[ضعيف.] - [رواه الدارقطني والحاكم والبيهقي وقال: موقوف.]
المزيــد ...

ابو ثعلبہ الخشنی رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ نبی ﷺ نے فرمایا: بے شک اللہ تعالیٰ نے کچھ فرائض مقرر کیے ہیں، تم انہیں ضائع نہ کرو، کچھ حدیں قائم کی ہیں، ان سے تجاوز نہ کرو، کچھ چیزوں کو حرام قرار دیا ہے لہذا ان کی حرمت کو پامال نہ کرو اور اس نے تم پر رحم فرماتے ہوئے بغیر بھولے کچھ چیزوں پر خاموشی اختیار کی ہے تو تم ان کی ٹوہ میں نہ پڑو‘‘۔

شرح

رسول اللہ ﷺ نے احکام کو فرائض، حدود اور حرام اشیاء میں تقسیم کیا اور حرام کے ارتکاب، حدود کی پامالی اور فرائض کو ضائع کرنے سے ڈرایا ہے۔ آپ ﷺ نے آخری قسم ان اشیاء کی بیان کی ہے جن کے بارے میں خاموشی اختیار کی گئی ہے۔ وحی کے زمانے میں جس شے کے بارے میں خاموشی اختیار کی گئی ہوتی اس سے متعلق نہیں پوچھا جاتا تھا اس اندیشے کے تحت کہ کہیں وہ حرام نہ ہو جائے۔تاہم اب شریعت کا ہر حکم اچھی طرح ثابت ہو چکا ہے۔ (اس لیے پوچھنے میں کوئی حرج نہیں۔)

ترجمہ: انگریزی زبان فرانسیسی زبان ہسپانوی زبان ترکی زبان انڈونیشیائی زبان بوسنیائی زبان روسی زبان بنگالی زبان چینی زبان فارسی زبان
ترجمہ دیکھیں